What will Happen In 2050 - Future World Of Technology

What will Happen In 2050 – Future World Of Technology

Interesting Facts

What will Happen In 2050 – Future World Of Technology



دوستو ہم سب یہی چاہتے ہیں کہ ہم کسی نہ کسی طرح اپنے فیوچر کو دیکھ لیں لہذا یہ تو نا ممکن ہے کیونکہ کوئی بھی شخص فیوچر کو نہیں دیکھ سکتا لیکن بات کی جائے ٹیکنالوجی کی تو آج ٹیکنالوجی نے بہت زیادہ ترقی کرلی ہے اور جس تیزی سے ہم آج بڑھ رہے ہیں جس کی وجہ 2050 کیا کیا ہوسکتا ہے ان چند باتوں کا اندازہ لگایا جا سکتا ہے. تو آج کی اس وڈیو میں میں آپ کو 2050 چند ایسی ہی باتوں کے بارے میں آپ کو بتانے والا ہوں جو آپ یقین نہیں جانتے ہوں گے اور جان کر حیران بھی ہونگے گے تو چلے دوستو آج کی ویڈیو شروع کرتے ہیں.

ابھی دنیا کی آبادی 735 کروڑ ہے لیکن 2050 تک دنیا کی آبادی ایک ملین کروڑ سے بھی زیادہ ہو جائے گی. اور پاکستان کی آبادی تین سو کروڑ تک بڑھ جائے گی اور آبادی کے لحاظ سے پاکستان دنیا کا چوتھا بڑا ملک ہوگا
2050 تک انسانی لیبر %70 تک کم ہوجائے گی کیونکہ ان کی جگہ ربورٹس لے لیں گے. جس کی وجہ سے بے روزگاری کافی بڑھ جائے گی. کیونکہ رپورٹس کا یہ فائدہ ہوگا کہ ایک دفعہ خریدنے کے بعد کوئی سیلری نہیں دینی پڑے گی اس کے برعکس اگر آپ کسی انسان کو کام پر رکھتے ہیں تو اس کو ہر ماہ تنخواہ دینی پڑتی ہے.





آج سے بیس سال بعد جہاز کا سفر زیادہ مزیدار اور آرام دہ اور کافی تیز ہوگا. اور آپ جہاز میں سفر کرتے ہوں باہر کے ہر نظارے سے لطف اندوز ہو سکیں گے کیونکہ جہاز کا اوپری حصہ مکمل طور پر ٹرانسپرنٹ ہوگا یہ ایسے گلاس سے بنا ہوگا جس کی مدد سے آپ باہر کی چیزوں کو آسانی سے دیکھ پائیں گے.

2050 تک زیادہ تر انسانی آبادی شہروں میں منتقل ہو جائے گی جہاں پر ہر شہری کو مناسب سہولیات ہوگی.

2050 تک آنکھوں کی بیماری میں کافی زیادہ حد تک اضافہ ہوگا . تقریبا بہتر پرسنٹ لوگ اس بیماری کا شکار ہونگے یہ بیماری موبائل اور کمپیوٹر کو زیادہ استعمال کرنے کی وجہ سے پھیلے گی. اور اس وجہ سے گوگلز کا استعمال بہت زیادہ ہوگا




2050 تک کینسر اس جیسی خطرناک بیماریوں سے مرنے والوں کی تعداد نہ ہونے کے برابر ہوگی کیونکہ میڈیکل اتنی زیادہ ترقی کر چکا ہوگا کے اس جیسی خطرناک بیماری کا فوری علاج کیا جاسکے گا. ابھی دنیا میں ہر سال تقریبا 90 لاکھ لوگ کینسر سے مرتے ہیں.

2050 تک لیٹیسٹ گیجٹ آچکے ہوں گے گے اتنے لیٹیسٹ کے آپ آپ کو اپنا موبائل ہاتھ میں پکڑنے کی ضرورت نہیں ہوگی.

2050 تک ہر چیز آٹومیٹک ہوچکی ہوگی آپ گھر سے دور بیٹھ کر اپنے گھر کی لائٹس اور دروازوں کو کنٹرول کر سکیں گے

2050 تک سیلف ڈرائیونگ کار آ چکی ہوگی گی. جس کی وجہ سے آپ کو اپنی گاڑی کے لئے ڈرائیور نہیں رکھنا پڑے گا اب آپ سوچ رہے ہوں گے جب ڈرائیور نہیں ہوگا تو پھر آکسیڈنٹس بھی زیادہ ہوں گے لیکن دوستو ان کارز میں سینسرز اور کیمراز لگے ہوں گے جن کی مدد سے یہ کارز خودبخودڈرائیو کریں گی اور حادثات کی ریشو بھی کافی کم ہو جائے گی.




2050 تا ہر چیز آن لائن ہوگی مارکیٹس اور دکانیں کافی حد تک کم ہو جائیں گی آپ ہر چیز گھر بیٹھی آن لائن آرڈر کر سکیں گے اور انٹرنیٹ کی سپیڈ اس سے دس گنا زیادہ تیز ہوگی

دوستو تو جہاں ان ساری چیزوں کے بہت سارے فائدے بھی ہوں گے وہاں پر ہیں ان چیزوں کے کچھ نقصانات بھی لازمی جس پر یہ ساری ویڈیوز سائنٹیفک کی سوچ اور ریسرچ پر بنائی گئی ہے ہوسکتا ہے 2050 میں بالکل ایسا ہی ہو اور ایسا بھی ہوسکتا ہے کہ ایسا بالکل بھی نہ ہو

 What will Happen In 2050 – Future World Of Technology.

What will Happen In 2050 - Future World Of Technology